افغان رکن پارلیمنٹ فقوری بہشتی خودکش حملے میں زخمی


8151522-3x2-700x467

افغان رکن پارلیمنٹ فقوری بہشتی خودکش حملے میں زخمی

افغان دارالحکومت کابل میں رکن پارلیمنٹ کی گاڑی پر چھٹے پولیس ضلع ، مسجد کے پاس علاقہ دشت برچ، مغربی کابل میں خودکش حملہ کیا گیا ۔حملے میں رکن اور انکا بیٹا زخمی اور انکا باڈی گارڈ  اور بہشتی کا ایک رشتہ دارجاں بحق ہو گئے ۔

3baca2ee00000578-4070046-image-a-12_1482915760919

غیر ملکی خبر رساں ادارے’’ سپٹنک ‘‘کے مطابق کابل میں افغان رکن پارلیمنٹ فقوری بہشتی کو اس وقت نشانہ بنایا گیا جب وہ اپنی گاڑی پر جار ہے تھے ۔ دہشتگردوں نے انکی گاڑی کو نشانہ بنایا جس میں وہ اور انکا بیٹا زخمی ہو گئے جبکہ گارڈ اور بہشتی کا ایک رشتہ دار جاں بحق ہو گئے ۔فقوری بہشتی افغانستان کے وسطی صوبے بمیاں کے دارالحکومت بمیاں سے رکنِ پارلیمان ہیں۔ایک اور اطلاع کے مطابق حقانی نیٹ ورک کے دہشتگردوں نے ، جو کہ اس حملہ کے ذمہ دار ہیں، گاڑی کےساتھ ایک مقناطیسی بم چپکا رکھا تھا جو ایک دہماکہ سے پھٹ گیا۔

3baca2ee00000578-4070046-image-a-12_1482915760919

news-1482911002-2444_large

دہشتگردی اور بم دھماکے اسلام میں جائز نہیں یہ اقدام کفر ہے. اسلام ایک بے گناہ فرد کے قتل کو پوری انسانیت کا قتل قرار دیتا ہے معصوم شہریوں کو دہشت گردی کا نشانہ بنانا، قتل و غارت کرنا خلاف شریعہ ہے۔ یہ دہماکہ حقانی نیٹ ورک کا کام دکھائی دیتا ہے۔ حقانی نیٹ ورک ایک موثر اور فعال دہشتگرد گروہ ہے جو کہ پاکستان و افغانستان کے سرحدی علاقوں میں سرگرم  ہے اوریہ پاکستان اور افغانستان کے لئے ایک صاف،واضع اور موجودہ خطرہ ہے۔ حقانی نیٹ ورک نے افغانستان میں بے پناہ مسائل پیدا کر دیئے ہیں۔حقانی نیٹ ورک پورے خطہ کے لئے ایک خطرہ ہیں۔
جہاد وقتال فتنہ ختم کرنے کیلئےہوتا ہے ناکہ مسلمانوں میں فتنہ پیدا کرنے کیلئے دہشتگرد تنظیمیں جہالت اور گمراہی کےر استہ پر ہیں۔.اسلامحقانی نیٹ ورک کے لو گ جہاد نہ کر رہے ہیں۔ وہ اپنے اقتدار کی جنگ کر رہے ہیں۔ویسے بھی جہاد خدا کی راہ میں خدا کی خوشنودی کے لئے ہوتا ہے۔علمائے اسلام ایسے جہاد کو’’ فساد فی الارض ‘‘اور دہشت گردی قرار دیتے ہیں اور ایسا جہاد فی سبیل اللہ کی بجائے جہاد فی سبیل غیر اللہ ہوتا ہے ۔اس قسم کی صورت حال کو قرآن مجید میں حرابہ سے تعبیر کیا گیا ہے۔ یہ انسانی معاشرے کے خلاف ایک سنگین جرم ہے انتہا پسند و دہشت گرد افغانستان کا امن تباہ کرنے اور اپنا ملک تباہ کرنے اور اپنے لوگوں کو مارنے پر تلے ہوئے ہیں۔

 

Advertisements