عوامی مشروب تھادل


عوامی مشروب تھادل

تھادل ، سندھ کا روایتی مشروب ہے۔ اسے بادام، کالی مرچ، خشخش اور دیگر اجزاء سے مل کر بنایا جاتا ہے۔ سندھ کے متعدد شہروں خاص کر سکھر میں یہ بڑے پیمانے پر ’پبلک ڈیمانڈ‘ میں ہے۔ اسے بڑے پیمانے پر پسند کئے جانے کا ایک سبب اس کا مزیدار ذائقہ ہے۔ تھادل کے بارے میں روایت ہے کہ یہ جگر کے مرض میں بہت سُود مند ہے۔

ملک بھر میں سورج کا پارہ چڑھا تو شہریوں کو ٹھنڈے مشروبات کی یاد آگئی۔کراچی کے شہری گنے کے رس اور لسی سے پیاز بجھانے لگے جبکہ اندرون سندھ شاہراہوں پر روایتی مشروب ٹھنڈا ٹھار,  تھادل پی کر پیاس بجھانے لگے۔ گرمی کا زور توڑنے کے لیے لو گوں نے تھا دل کی دکانوں کا رخ کر لیا. پانی اور برف ملاکر اسے چھان کر فروخت کے لیے بڑے دیگچے میں رکھا جاتا ہے اور 30 روپے فی گلاس کے حساب سے خریداروں کو دیا جاتا ہے۔

موسم گرما کی آمد کیساتھ ہی سکھر شہر میں گرمی میں بھی بے تحاشہ اضافہ ہو گیا ہے اور شہریوں نے گرمی کی شدت سے بچنے کیلئے ٹھنڈے مشروبات کی دکانوں کا رخ کرنا شروع کر دیا ہے ، آج کل سکھر کے مختلف مقامات پر جھونپڑیاں ڈال کر سندھ کا مشہوردودھ کی طرح سفید مشروب تھادل فروخت کیا جا رہا ہے ، شہر کے چھوٹے بڑے مقامات ، بس اسٹینڈ اور دیگرعلاقوں میں تھادل فروخت کرنے والوں نے اسٹال لگا دیے ہیں اور ان اسٹالز سے ڈنڈے سے بندھی گھنگھرو کی آواز کیساتھ تھادل تیار کیا جا رہا ہے ، تھادل کی تیا ری میں خشخش ، زیرہ ، سونف، کا لی مرچ، چار مغز و دیگر اشیا استعمال کی جاتی ہیں جن سے دل کو راحت ملتی ہے اور جو گرمی کا بہترین توڑ بھی ہے .گرمی بڑھنے پر یہ لوگوں کا پسندیدہ مشروب بن جاتا ہے اور  فی گلاس قیمت ہونے کی وجہ سے غریب بھی مستفید ہوتے ہیں.

تھادل گرمیوں کا مشہور اور دلفریب مشروب ہے جس کے پینے سے نہ صرف ٹھنڈک محسوس ہوتی ہے بلکہ دن بھر گرمی کا احساس نہیں ہوتا۔ انتہائی معقول قیمت میں دستیاب تھادل جسے گرمی میں کام کرنے والے بلخصوص غریب لوگ اور ٹرانسپورٹر بڑے شوق سے پیتے ہیں۔ طبی ذرائع کے مطابق تھادل گرمیوں کے لیے بہت اچھا ریفریشمنٹ ہے اور بوتل سے بہتر ہے۔ مٹی کے کونڈے اور ڈنڈے سے بنائی جانے والی تھادل میں زیرا ، الائچی ، کالی مرچ ، خشخاش ، بادام ، گلاب کا پھول و دیگر ٹھنڈک پہنچانے والی اشیاء ملائی جاتی ہیں۔اس مہنگائی کے دور میں مختلف مفید اشیاء سے بنائی گئی دس سے پندرہ روپے میں دستیاب تھادل اب عام طور پر استعمال کیا جانے لگا ہے۔تھادل کی مقبولیت اور استعمال کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ کسی بھی لنک روڈ، بازاروں یا قومی شاہراہ پر سفر کے دوران ہر ایک کلو میٹر پر تھادل کے ٹھیلے نظر آتے ہیں جو لوگوں کو گرمیوں میں ٹھنڈک پہنچانے کے علاوہ ایک روزگار کا زریعہ بھی بنے ہوئے ہیں۔

تھادل بنانے کیلئے ایک کلو چینی، 150 گرام بادام، 1 کھانے کا چمچ چہار مغز، ایک کھانے کا چمچ ثابت سبز الائچی، سونف ایک کھانے کا چمچ، خشخاش ایک کھانے کا چمچ، زیرہ ایک کھانے کا چمچ درکار ہوگا۔
150 گرام بادام کو رات بھر پانی میں بھگو کر چھلکا اتار دیں اسی طرح سونف، چہار مغز، خشخاش، سبز الائچی اور زیرہ کو ایک کپ پانی میں رات بھر کیلئے بھگو کر رکھیں۔


تھادل بنانے کیلئے سب سے پہلے ایک پین میں ایک لیٹر پانی اور چینی کو پکنے کیلئے چولہے پر رکھ دیں، ساتھ ساتھ اس میں بننے والا جھاگ چھلنی سے اتارتے جائیں ۔اب بادام، چہار مغز، خشخاش، سبز الائچی، سونف اور تھوڑا سا پانی بلینڈر میں ڈال کر پیس لیں،اس کو کپڑے کی مدد سے چھان کراس کا پانی شیرے میں ڈال دیں۔
مزید 10 منٹ تک شیرے کو پکا کرچولہے سے اتارلیں ، اس کو ٹھنڈا کرکے بوتل میں ڈال لیں اور آپکا مشروب تیار ہے۔

Advertisements

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s