ٹیگ کے محفوظات: متحرک

دولتِ اسلامیہ‘ کا حملہ کیا خطرے کی گھنٹی ہے؟


index

دولتِ اسلامیہ‘ کا حملہ کیا خطرے کی گھنٹی ہے؟
پاکستان کے قبائلی علاقے اورکزئی ایجنسی میں مقامی حکام کے مطابق اتوار کے روز ایک حملے میں تین سکیورٹی اہلکار ہلاک ہوئے ہیں۔
اس حملے کے بارے میں غیرمعمولی بات گزشتہ دنوں قائم کی جانے والی شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ یا داعش کا اس کی ذمہ داری قبول کرنا ہے۔ تو کیا اس کا متحرک ہونا پاکستان کے لیے کتنے بڑے خطرے کی گھنٹی ہے؟

دولتِ اسلامیہ‘ کا حملہ کیا خطرے کی گھنٹی ہے؟ پڑھنا جاری رکھیں

Advertisements

دہشتگردوں کے نئے حربے


دہشتگردوں کے نئے حربے
وزیرداخلہ چوہدری نثار علی خان نے دہشت گردی سے نمٹنے کےلئے ہوئے قوم کوخبردار کیاہے کہ ہم اس وقت حالت جنگ میں ہیں اورہمارا دشمن باہر سے نہیں اندر سے ہے. سانحہ پشاور کے تمام ملزم پاکستانی ہیں. انہوں نے متنبہ کیا کہ دہشت گرد پشاور جیسی مزید وحشیانہ کارروائی کی تیاری کررہےہیں۔عوام کوایسے کسی بھی حملے سے بچنے کےلئے متحرک ہونا ہوگا۔ملک اس وقت دہشت گردی اوربدامنی کے جس دور سے گزر رہا ہے اس کومد نظر رکھتے ہوئے وزیرداخلہ کاانتباہ زمینی حقائق اوروقت کے تقاضوں کے عین مطابق ہے۔
تجزیہ کاروں کا کہناہے کہ کیونکہ طالبان دہشتگرد ، مسلح، تربیت یافتہ سیکورٹی فورسز کا مقابلہ کرنے کے قابل نہیں ہیں، اس لیے وہ اب آسان اہداف” کو نشانہ بنا رہے ہیں اور پاکستانی قوم کو دہشتزدہ کر کے قوم کے عزم کو متزلزل کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

دہشتگردوں کے نئے حربے پڑھنا جاری رکھیں